spot_img
Friday, September 30, 2022
spot_img

-

ہومLatest Newsاے آر وائی پر پابندی: بول نے ریٹنگز میں جیو نیوز، ہم...

اے آر وائی پر پابندی: بول نے ریٹنگز میں جیو نیوز، ہم نیوز، سماء اور دنیا کو مات دیدی

- Advertisement -
- Advertisement -

پاکستانی میڈیا انڈسٹری میں کبھی وقت ایک سا نہیں، رہتا کبھی اگر جیو نیوز ریٹنگز میں ایک دہائی سے ٹاپ ریٹنگز لے رہا تھا تو اب عمران خان حکومت کے جانے کیبعد سے اے آر وائی نے جیو سمیت تمام ہم عصر چینلز کو ریٹنگز میں پیچھے چھوڑ دیا، اے آر وائی نے عوام کی نبض پر ہاتھ رکھا اور خان کے جلسے لائیو دکھانا شروع کر دیے، اور پھر چینل نے ایسی ایسی ریکارڈ ریٹنگز لیں کے کوئی چینل نزدیک ترین بھی ناں آ سکا،

دنیا بھر میں میڈیا ہاؤسز کھل کر سیاسی حکومتوں کی حمایت اور مخالفت کرتے ہیں، امریکہ میں فوکس نیوز کھل کر ٹرمپ کی سپورٹ کرتا تھا، اور سی این این شدید مخالفت، یہاں تک کے ٹرمپ نے بحثیت صدر بھی سی این این کے رپورٹرز کو پریسر سے باہر نکالا تھا، اور سی این بی سی کے رپورٹر سے سخت تکرار بھی ہوئی تھی.

ہم نے پاکستان میں دیکھا ہے کے جیو نیوز و جنگ گروپ کھل کر عمران خان کی مخالفت کرتا ہے اور شدید ناقد رہا ہے، جبکہ مسلم لیگ ن کیلیے نرم گوشہ رکھتا ہے، اسی طرح دوسرا بڑا نیوز چینل اے آر وائی نیوز ہے جس نے ہمیشہ پی ٹی آئی حکومت کو سپورٹ کیا، اور مسلم لیگ ن و قیادت کو سوا نیزے پر رکھا، 

حالیہ پاکستانی سیاست میں جو چینل بھی خان کے بیانیہ کیساتھ جڑتا ہے, وہ ریٹنگز میں سب کو پیچھے چھوڑ دیتا ہے، 

اب حالیہ اے آر وائی پر پابندی کیبعد یہ خان بیانیہ والا جھنڈا بول نیوز نے اٹھایا اور چودہ اگست کو عمران خان کے جلسے کی بھر پور کوریج سے تمام چینلز کو پیچھے چھوڑ دیا، حالانکہ سماء نیوز اور دنیا نیوز، اے آر وائی کی چھوڑی جگہ پر کر سکتے تھے، لیکن مالکان کی ذاتی پسند و نا پسند کیوجہ سے اس موقع سے فایدہ ناں اٹھا سکے، خاص کر یہ سماء ٹی وی کیلیے کسی لمحہ فکریہ سے کم نہیں.

- Advertisement -

Related articles

Stay Connected

6,000مداحپسند
300فالورزفالور
3,061فالورزفالور
400سبسکرائبرزسبسکرائب کریں

Latest posts