spot_img
Wednesday, July 6, 2022
spot_img

-

ہومLatest Newsوزیراعظم کا 18 ویں ترمیم اور پارلیمانی جمہوریت مخالف بیان قابل مذمت:...

وزیراعظم کا 18 ویں ترمیم اور پارلیمانی جمہوریت مخالف بیان قابل مذمت: شیری رحمان

- Advertisement -
- Advertisement -

شیری رحمان نے کہا ہے کہ ‏وزیراعظم کا 18 ویں ترمیم اور پارلیمانی جمہوریت مخالف بیان قابل مذمت ہے، ‏صوبوں کے ساتھ عدم تعاون کی ذمہ دار وفاقی حکومت ہوتی ہے۔

پیپلزپارٹی کی مرکزی نائب صدر و سینیٹر شیری رحمان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ انٹریو میں وزیراعظم نے کہا 18 ویں ترمیم سے مسائل آئے ہیں، 18 ویں ترمیم آئین پاکستان کے بعد دوسرا سب سے بڑا متفقہ دستاویز تھا، جو صدارتی اختیارات آپ چاہتے ہیں وہ آصف زرداری نے پارلیمان کو منتقل کئے۔

شیری رحمان نے وزیراعظم کے عالمی نشریاتی ادارے کو انٹرویو بارے ردعمل میں کہا کہ تین صوبوں میں آپ کی پارٹی کی حکومت ہے، کیا پنجاب، کے پی اور بلوچستان کے عدم تعاون کا ذمہ دار بھی کوئی اور ہے ؟ اپنی نااہلی اور ناکامیوں کا کب تک دوسروں کو مورد الزام ٹھرا ئیں گے ؟ وزیراعظم متنازعہ بیانات دینے سے گریز کریں۔

- Advertisement -

Related articles

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں

Stay Connected

6,000مداحپسند
300فالورزفالور
3,061فالورزفالور
400سبسکرائبرزسبسکرائب کریں

Latest posts