spot_img
Thursday, August 18, 2022
spot_img

-

ہومLatest Newsتشہیر کے لیے فلم کے فحش اشاروں کا استعمال ، کراچی کے...

تشہیر کے لیے فلم کے فحش اشاروں کا استعمال ، کراچی کے ہوٹل پر شید تنقید

- Advertisement -
- Advertisement -

کسی بھی ہوٹل یا ریستوران کی کام یابی میں اس کی تشہیر بہت معنی رکھتی ہے۔ اور اس معاملے میں معاشرے کی سماجی اور اخلاقی اقدار کا خیال رکھنا بھی ضروری ہے۔ اس معاملے میں حد سے زیادہ اعتماد بھی غلط ثابت ہوجاتا ہے۔

ایسا ہی کچھ کراچی کے ایک ریستوراں کے ساتھ ہوا، کراچی کے ایک ہوٹل نے عالیہ بھٹ کی فلم “گنگو بائی کاٹھیاواڑ” کے نازیبا منظر کو ایڈٹ کرکے اسے انسٹاگرام پر جاری کردیا۔

“سوئنگ” کے نام سے کھلنے والے ہوٹل کے اس اشتہار میں دیکھا جاسکتا ہے کہ عالیہ بھٹ فحش اشارے کرتے ہوئے مردوں کو ہوٹل کی ڈسکاؤنٹ آفر حاصل کرنے کے لیے بلا رہی ہیں۔

فلم کے حقیقی منظر میں عالیہ بھٹ یہ اشارے اپنے قحبہ خانے میں مردوں کو بلانے کے لیے کرتی ہیں۔ 

سوئنگ نامی ریستوران کے سوشل میڈیا اکاؤنٹ پرشیئر کی جانے والی ویڈیو میں انتظامیہ کی جانب سے ہر پیر کے روز صرف مردوں کو کھانے پر 25 فیصد رعایت دینے کا اعلان کیا گیا۔

مذکورہ ویڈیوپر سوشل میڈیا صارفین کی جانب سے ہوٹل انتظامیہ کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔ صارفین کا کہنا ہے کہ ایک حساس اور معاشرے کے لیے کلنک کا ٹیکہ سمجھے جانے والے موضوع پر بننے والی بھارتی فلم کے نازیبا مناظر کے استعمال پر اخلاقی طور پر بائیکاٹ کرنا چاہیئے۔

سوشل میڈیا صارفین کی جانب سے ہونے والی تنقید پر بھی سوئنگ نے اپنی غلطی پر معافی مانگنے کے بجائے فلم کے پوسٹر کو استعمال کرتے ہوئے ایک اور پوسٹ شیئرکر دی۔

 اس حوالے سے انتظامیہ کا کہنا ہے کہ ” ہمارا مقصد کسی کے جذبات کو ٹھیس پہنچانا نہیں تھا۔ فلم اور یہ پوسٹ ایک تصور پر مبنی ہے، پہلے کی طرح ہم سب کے لیے کھلے ہیں اور اسی محبت کے ساتھ آپ کی خدمت کریں گے جیسا کہ ہم ہمیشہ کرتے ہیں۔”

- Advertisement -

Related articles

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں

Stay Connected

6,000مداحپسند
300فالورزفالور
3,061فالورزفالور
400سبسکرائبرزسبسکرائب کریں

Latest posts